تلوار سے زیادہ طاقتور قلم نہیں ہے


10027_10151433086589527_848382061_n

لیجیئے صاحب ہم بھی کس بحث میں پڑ گئے۔ یہاں انقلاب آیا چاہتا ہے اور ہم ۱۹۹۰ کی دہائی کے ایک گھسے پٹےعنوانکو لے کے بیٹھ گئے۔ مگر کیا کیجیئے جیسی سمجھ آج اس عنوان کی آ رہی ہے وہ ہماری صغر سنی میں کہاں تھی? ہمارے سکول میں تقاریر اور مباحثوں کا ایک ہی گھسا پٹا عنوان تھا جس میں انگریزی کے شعلہ بیاں مقرر خوب دھواں دار تقاریر کرتے تھے۔ اردو کا عنوان اکثر اقبال کا مصرہ احساسِ مروت کو کچل دیتے ہیں آلات ہوتا تھا جس میں ہمارے سکول کے مقرر مغربی سائنسی ارتقاء کو جہالت اور مشرقی اسلامی شدت پسندی کو راہِ حیاتِ جاویدانی اور تمام مسائل کا حل بتلایا کرتے تھے۔ تو بات ہو رہی تھی قلم کی۔ بھئ کیونکہ میں بھی ایک مقرر تھا اس لیئے میں بھی اسی عنوان کو لے کے خوب دھواں دار تقریریں کرتا تھا اور انعام جیت کے والدین کو خوش کرتا۔ ستم ظریفی دیکھیئے مجھے ہمیشہ اس عنوان کی حمایت میں اپنے خیالات کے اظہار کا موقع ملتا اور میں تندہی سے تاریخ کے اوراق کی بدترین مثالوں کو قابلِ رشک بنا کے پیش کرتا۔

imrankhanfinal_380

خیر آج بھی میں نے اسی عنوان کی حمایت میں ہی قلم اٹھانے کی جسارت کی ہے۔ بھئی کیا ہو گیا اگر عمران بادشاہت کا خاتمہ کرنے آگیا? ہم نے بھی ہمیشہ عوامی آواز کو بغاوت ہی کہا ہے۔ اب ذرا فاطمہ جناح کی ہی مثال لے لیجئے۔ نام مادرِ ملت اور رہن سہن مغربیت کا نمونہ۔ تبھی تو قبلہ فیلڈ مارشل ایوب خان نے انہیں تنبیہہ کی تھی کے محترمہ آپ اپنے خطاب کا ہی خیال کیجیئے۔ کہیں یہ قوم آپ کو عبرتناک شکست سے دوچار نہ کرے۔ وہ بیچاری کبریائی میں سٹھیا گئیں اور قوم کے ضمیر کو جھنجھوڑ دیا۔ بھلا بنگالی جنہیں عرفِ عام میں بھوکے بنگالی اور خواص میں بھارتی غدار کہا جاتا تھا وہ انہیں انتخابات میں کامیاب کرتے? بھلا بتائیے کہ بیشک آپ جناح کا پاکستان بنانے کی بات کرتی تھیں مگر جناح کے پاکستان کے بارے میں کچھ نہ جانتی تھیں۔ بھئ قوم نے آپ کو اتنی عزت دی اور آپ قرارداد ِ لاہور کا رونا روتی رہیں تو پھر کیا ہمارے ملک میں شفاف انتخابات ہوئے اور آپ کو اور آپ کی مغربیت کو عوام نے بالغ رائے دہی کے تحت شکستِ فاش دے دی۔

Muhammad Ali Jinnah 19

بھئ فوج ملک کی حفاظت نہ کرے تو کون کرے? ورنہ اے کے فضلِ حق بھاشانی اور دیگر نے تے ملک کا سودا کر لیا تھا۔ بھلا ۱۹۵۲ کے لسانی فسادارت کی کیا منطق تھی? اسی سے خیال آیا! بھلا بنگالی کو مسلمانوں کے اثاثے اردو پہ فوقیت دی جا سکتی تھی? بھائی صاحب بنگالی لکھی دیکھی ہے? اس میں ہندومت کی مشابہت زیادہ اور اسلام کی تو قطعاً نہیں ہے۔ پھر بھی ہم نے اسے قومی زبان کا درجہ دیدیا۔ آپ خوش نہ ہوئے جب ملک میں انڈسٹرائیزیشن ہوئی تو آپ روتے رہے کہ مشرقی پاکستان کو جان کے پسماندہ رکھا جا رہا ہے۔ بلکہ ایک صاحب کو تو اسلام آباد کے نقشے اور انہیں کے جانشین کو اس کی سڑکوں سے پٹسن کی بو آتی رہی! اگر اقتدار تحریک ِ پاکستان کے خودساختہ لیڈران کے حوالے کر دیا جاتا تو یہ مغربی پاکستان کے غیور عوام کو بھارتی غلام بنانے میں دیر نہ کرتے۔

images (4)

اس ملک کو نقصان امریکی بھارتی اور اسرائیلی ایجنٹوں نے پہنچایا ہے! اب یحییٰ نے انتخابات شفاف کروائے اور بھارتی ایجنٹ چھ نکاتی ایجنڈہ پیش کر کے بیٹھ گئے اور تو اور بھارت سے پاکستان پہ حملہ کروا دیا ہماری مشرقی پاکستان میں بیٹھی پرامن فوج پہ حملے کروائے اور غازی جنرل نیازی کے ہاتھوں نوشتہ دے دیا کہ پاکستان مشرقی پاکستان پہ کوئی تسلط نہیں رکھے گا۔ کسی نے کہا تھا وہاں تم یہاں ہم۔ خیر جمہوریت کو ایک بار پھر موقع ملا۔ آئین بھی بن گیا مگر بھٹو صاحب کو دیکھیں کہ پاکستان کے وقار کے سودے پہ تل گئے۔ سول مارشل لا ایڈمنسٹریٹر بن گئے۔ بعدازاں وزیراعظم بنے تو آمریت کی روش نہ چھوڑی۔ عوام نکل آئی سڑکوں پہ۔ بھٹو ماورائے عدالت قتل کرواتے رہے۔ ملک لوٹتے رہے اور عوام نے مسیحا کو پکارا اور ہمیں مرد مومن مرد حق ضیاءالحق نے اس جمہوری آمریت کے چنگل سے نکالا اور اسلام جو کے پاکستان بنانےکا مقصد تھا اس کا عملی نفاذ کیا۔

images (2)

آپ کو شک ہے? کس نے روس اور سرخوں کا گرم پانیوں تک پہنچنے کا ارادہ تہسنہس کیا? کون سوپر پاور سے ٹکر لے سکتا ہے? بھٹو کا اقوام متحدہ میں کچھ کاغذات پھاڑنا ایک ڈھونگ تھا اور بس۔ بھلا جہاد کس نے مملکت خداداد میں جاری کیا اور پاکستان کو اسلام اور جہادیوں کا قلعہ بنایا? کس نے ملک میں حدود کا نفاذ کیا اور کس نے مغرب کو جھکایا? یہ مرد مومن مرد حق ہی تھے جنہیں امریکہ اور بھارت نے سازش کر کے شہید کر دیا کیونکہ مغرب کو اسلام کیونکر راس آتا? اور تف ہے ان لوگوں پر جو مٹھائیاں بانٹتے رہے اس واقعہ پہ۔ آخر کو را کا پیسہ بول رہا تھا۔ پھر اس جمہوریت کو ایک اور موقعہ ملا۔ مگر بینظیر جیسی آمریت پسند کے خلاف نواز شریف اسلامی جمہوری اتحاد لیکر میدان میں سینہ سپر ہوئے۔ بینظیر نے انتخابات میں دھاندلی کی اور وزیراعظم بن بیٹھیں اور ملک لوٹ لیا۔ پھر کیا یہ آمریت زیادہ دیر نہیں چلتیں عوام سڑکوں پہ آ گئے اور نواز کو موقع دیا۔ نواز بھی کچھ کم نہ تھا اس نے ملک میں آمریت کی نئی مثال قائم کی اور بینظیربھٹو عوام کا سمندر لیکر سڑکوں پہ آ گئیں۔ مگر بینظیر نہ بدلیں۔ عوام نے ایک بار پھر نوازشریف کو موقع دیا مگر موصوف نے جو حرکتیں کیں وہ لکھتے ہوئے ہاتھ کانپ جاتے ہیں۔

Zia ul Haq's "spiritual" Son -- Nawaz Sharif

Zia ul Haq’s “spiritual” Son — Nawaz Sharif

ایک اور بات یہ کہ میں اپنی ۲۸ سالہ زندگی میں ۸ الیکشن دیکھ چکا ہوں۔ یہ بھی ایک اعزاز ہے۔ بھئ میں نے خود فیسبوک کے کسی پیج پہ پڑھا ہے کہ نوازشریف جو ایٹم بم کا تاج سجائے پھرتا ہے وہ اس وقت بنا جب وہ ولڈر تھا۔ یہ بات بانئ ایٹم بم جناب قدیر خان سے منسوب ہے۔ جب فیسبوک پہ ہے تو ٹھیک ہی ہو گی! نوازشریف نے ملک کو کھانے کے ساتھ ساتھ فوج کو بھی نہ چھوڑا اور مشرف کو ٹھکانے لگانے لگا۔ ہمارا وقار مجروح ہوا اور ملک میں ایک اور بار حقیقی جمہوریت آ گئی۔ کیا مشرف کے دور میں اسمبلی نے مدت پوری نہیں کی? اور یہ جسٹس افتخار صاحب? چلیئے ہم اس قصہ کو مختصر کرتے ہیں مگر عمران خان جو قوم کی امید ہیں اس وقت بڈل گئے۔ اور اس غدارِ وطن کا ساتھ دیا۔ مجھے یاد ہے عمران اکثر فرماتے تھے کہ ہماری پارٹی کا تو نام ہی انصاف ہے تو ہم انصاف کا ساتھ کیوں نہ دیں? اور یہ کہ مشرف کو ہٹانے سے سب مسائل حل ہو جائیں گے۔ مشرف تو گیا مگر زرداری کا دور ِ آمریت آ گیا۔ محترمہ کو شہید کر دیا گیا اور الزام بیچارے بیت اللہ محسود پہ ڈال دیا حالانکہ سب جانتے ہیں کہ اصل بات کیا ہے۔

اب یہ ۲۰۱۳ کے انتخابات ہوئے تو ہم سمجھے کہ عوام کو حق ملے گا مگر نوازشریف نے اوپر سے نیچے جبکہ پاکستان تو پاکستان بین الاقوامی مبصرین کو بھی خرید لیا۔ بھائی صاحب پورے ملک میں عمران کو ۹۰ فیصد ووٹ پڑا تھا۔ آپ کو یقین نہیں آتا? فیسبوک کے پول ملاحظہ کر لیجیئے اور جلسوں میں عوام کے اژدہام کو آپ کیسے رد کریں گے? ابن الوقت لوگوں کو دیکھیں کہ پنڈت ثبوت مانگ رہے ہیں اور آئین کی بات کر رہے ہیں! آئین کیا ہے ایک کاغذ کا ٹکرا ہے جسے جب چاہے پھینکا جا سکتا ہے۔ لو ایک اور لطیفہ سنیئے کہ عدالتیں عمران کو انصاف دیں گی۔ جناب ِ والا جس عدالتوں کے چیف جسٹس صاحبان مبشر لقمان جیسے غیور ہوں گے اس دن ہی انصاف کی صحیح معنوں میں ترویج ہو گی۔ اور بکاؤ الیکشن کمیشن یہ انصاف دے گا? یہ نوازشریف کی زرخرید لونڈی ہے۔ ہاں اگر محترم محمد افضل خان جیسے غیرتمند اور دلیر الیکشن کمشنر ہوتے تو اور بات تھی فخرو بھائی کون ہیں? عمران نے کہا ہے کہ وہ بھی بکے ہوئے تھے۔

the-ji-connection-with-taliban-in-the-1990s-1

اور جو ثبوت مانگ رہے ہیں اور عمران کی جمہوریت دوستی پہ شک کر رہے ہیں آپ ملک کے غدار ہیں۔ جب اس ملک کے وفادار اور غیر جانبدار صحافی کہہ رہیں ہیں تو اور کسی ثبوت کی کیا گنجائش? آپ یاد رکھیئے کہ تھرڈ امپائر کہیں ہمارے حق میں فیصلہ نہ دے دے اس لیئے آپ ریٹائر ہرٹ ہو جائیں ورنہ ہم پویلین میں بھی نہیں بیٹھنے دیں گے۔ کیا کہا کہ تبدیلی چلے ہوئے کارتوس لائیں گے? آپ بادشاہ نوازشریف کے غلام ہیں۔ لگتا ہے آپ کو بھی خوب نوٹ ملے ہیں تبھی آپ ملک دوست سیاستدانوں کو چلا ہوا کارتوس کہہ رہے ہیں۔ کیا? خیبرپختونخوا میں کون سی تبدیلی آئی ہے? آپ شائد نابینا بھی ہیں فیسبک دیکھیئے اور تحریک انصاف کی ویب سائٹ۔ اور رہا سوال یہ کہ ہم نے سڑکیں میٹرو یا ڈیم کیوں نہیں بنائے تو ہمیں پاکستان کے ۹۰ او خیبرپختونخوا کے ۱۰۰ فیصد عوام نے اس لیئے ووٹ نہیں دیا تھا۔ یہ ہماری شرافت ہے کہ ہم کے پی میں دیگر پارٹیوں کی سیٹوں کا احترام کر رہے ہیں ورنہ جہاں جہاں تحریک کو ہرایا گیا وہاں الیکشن میں دھاندلی ہوئی ہے۔ ہم بادشاہت چلنے نہیں دیں گے۔ اور حیف ہو آپ سب کی سوچ پہ جو سول نافرمانی کو آئین سے بغاوت کہہ رہے ہیں۔ گاندھی نے بھی چلائی تھی یہ تحریک۔ کیا کہا اس وقت ہندوستان پہ سامراجی حکومت اور سامراجی قانون تھا? تو یہ ۷۳ کا آئین کون سا سامراجی نہیں ہے جس سے بادشاہ نوازشریف کو اقتدار نہ چھوڑنے کا جواز مل رہا ہے۔ بس بس اب زیادہ زبان درازی کی تو مجھے آپ کا شجرۂ نسب بیان کرنا پڑے گا پنجابی اور پشتو کا الفاظ کا سہارہ لیکر۔ بلکل غلط جاہل آپ ہیں میں آکسفورڈ کا پڑھا ہوا ہوں فل برائٹ سکالرشپ پہ اور میرے اکثر ساتھی مغربی ممالک کی اعلیٰ یونیورسٹیوں میں سیلف فائینانس پہ پڑھ رہے ہیں جو یہاں ہیں وہ بھی جانے کی تک و دو کر رہے ہیں۔ جاہل آپ ہیں سرکاری سکولوں کی پیداوار۔ تبھی آپ کو ایک سیدھی بات سمجھ نہیں آ رہی کہ کون بچائے گا پاکستان? عمران خان عمران خان۔ کیا? کیسے۔ ٹھہر ذرا۔ آؤ عمران کے چیتوں اس نہاری خور کو سبق سکھائیں!

Imran-Khan-PTI-Jalsa-in-Lahore-Girl-and-Boys-Together

Advertisements

One thought on “تلوار سے زیادہ طاقتور قلم نہیں ہے

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out / Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out / Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out / Change )

Google+ photo

You are commenting using your Google+ account. Log Out / Change )

Connecting to %s